افغانستان کرکٹ بورڈ کا تین کھلاڑیوں کو غیرملکی لیگز کیلئے این او سی جاری نہ کرنے کا فیصلہ

فوٹو: فائل
فوٹو: فائل

افغانستان کی کرکٹ ٹیم کے تین کھلاڑیوں مجیب الرحمان، فضل الحق فاروقی اور نوین الحق کے خلاف افغانستان کرکٹ بورڈ نے ڈسپلن کی خلاف ورزی پر کارروائی کرتے ہوئے انہیں اگلے دو برس تک غیر ملکی لیگز کھیلنے کےلیے این او سی جاری نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

افغانستان کرکٹ بورڈ کے بیان کے مطابق تینوں کھلاڑیوں نے سینٹرل کنٹریکٹ پر دستخط کرنے سے انکار کیا اور نیشنل ڈیوٹی کو ترجیح دینے کے بجائے غیر ملکی لیگز کھیلنے کے لیے اجازت دینے کی درخواست کی۔

افغان بورڈ کے مطابق تینوں کھلاڑیوں کے خلاف تادیبی کارروائی کرتے ہوئے اُنہیں اگلے دو برس تک کے لیے غیر ملکی لیگز کھیلنے کے لیے عدم اعتراض سرٹیفکیٹ (این او سی) جاری نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس کے علاوہ ان کھلاڑیوں کے سینٹرل کنٹریکٹ بھی تاخیر کا شکار ہوگئے، کھلاڑیوں کے نئے سینٹرل کنٹریکٹ یکم جنوری 2024 سے نافذ العمل ہوں گے۔

واضح رہے کہ تینوں کھلاڑیوں نے بورڈ سے درخواست کی تھی کہ اُنہیں سینٹرل کنٹریکٹ سے ریلیز کیا جائے تاکہ وہ غیر ملکی لیگز کھیل سکیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں